روزے کی حالت میں گرد و غبار کو نگلنا

حضرت آیة اللہ العظمی سید علی خامنہ ای
حضرت آیة اللہ العظمی سید علی خامنہ ای

روزے کی حالت میں گرد و غبار کو نگلنا

 

148. میں لوہے کی کان میں ملازمت کرتا ہوں اور مجھے اپنی ملازمت کے پیش نظر ہر روز اس میں اترنا پڑتا ہے اور مشینوں سے کام کرتے وقت غبار منہ میں جاتا ہے اور پورے سال یہی سلسلہ جاری رہتا ہے۔ میری ذمہ داری کیا ہے؟ اورمیرا روزہ اس حالت میں صحیح ہے یا نہیں ؟

ج۔ غلیظ گرد و غبار کا روزے کی حالت میں نگلنابنابر احتیاط واجب , روزہ کو باطل کر دیتا ہے۔ اس سے پرہیز کرنا چاہئے, لیکن صرف گرد و غبار  ناک اور منہ میں جانے سے روزہ باطل نہیں ہوتا جب تک اسے نگلا نہ جائے.

 

منبع: سائیٹ ہدانا نے آیت اللہ العظمی حضرت آیة اللہ العظمی خامنہ ای کے استفتائات سے اخذ کیا

[Total: 0    Average: 0/5]

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.