امام خمینی کے انتقال کے بعد میرا خیال یہ تھا کہ ان کے فتویٰ کے مطابق میت کی تقلید پر باقی رہنا جائز نہیں ہے لہذا میں نے زندہ مجتہد کی تقلید کرلی، کیا اب دوبارہ میرے لئے امام خمینی کی تقلید کی طرف رجوع کرنا جائز ہے؟

حضرت آیة اللہ العظمی سید علی خامنہ ای
حضرت آیة اللہ العظمی سید علی خامنہ ای

س٣٨: امام خمینی کے انتقال کے بعد میرا خیال یہ تھا کہ ان کے فتویٰ کے مطابق میت کی تقلید پر باقی رہنا جائز نہیں ہے لہذا میں نے زندہ مجتہد کی تقلید کرلی، کیا اب دوبارہ میرے لئے امام خمینی کی تقلید کی طرف رجوع کرنا جائز ہے؟
ج: جن مسائل میں آپ امام خمینی کی تقلید سے زندہ مجتہد کی طرف عدول کرچکے ہیں بنا بر احتیاط ان میں امام خمینی کی طرف رجوع کرنا جائز نہیں ہے مگر یہ کہ زندہ مجتہد کا فتویٰ یہ ہو کہ مردہ مجتہد اعلم ہو تو اس کی تقلید پر باقی رہنا واجب ہے اور آپ کے نزدیک امام خمینی ، زندہ مجتہد کی بہ نسبت اعلم ہوں تو ایسی صورت میں آپ پر امام خمینی کی تقلید پر باقی رہنا واجب ہے ۔

منبع: سائیٹ ہدانا نے حضرت آیة اللہ العظمی سید علی خامنہ ای کے استفتائات سے اخذ کیا

🔗 لینک کوتاه

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.